Drones positive use 190

ڈرون کا انتہائی مثبت استعمال

Abdul Jabbar Khan Columns

انسانی اعضاء کی پیوند کاری میں وقت کا بڑا خیال رکھا جاتا ہے کسی انسانی جسم سے نکالے گئے اعضاء کو بروقت اور مخصوص وقت میں دوسرے انسان کے جسم کے ساتھ منسلک کرنا ہوتا ہے۔ اکثر ایسے ہوتا ہے جہاں سے اعضاء لیا گیا ہے اور جہاں پیوند کاری کرنی ہوتی ہے دومختلف ہسپتال ہوتے ہیں یا کوئی مرنے سے پہلے اعضاء عطیہ کر جاتا ہے تو دوسرے ہسپتال پہنچانے میں پریشانی ہوتی ہے ٹریفک بلاک ہونے روڈ پر رش کی صورت میں وقت ضائع ہو جاتا ہے اور بعض مرتبہ دیر ہونے سے اعضاء استعمال کے قابل نہیں رہتے۔

Drones positive use

اس حوالے سے پڑوسی ملک بھارت نے ٹیکنالوجی کا سہارا لیتے ہوئے ایک زبردست اقدام اٹھا ہے اب اعضاء کی ڈلیوری مختلف ہسپتال میں ڈرون کے ذریعے کی جائے گی ۔

بھارت اس مقصد کے لیے یکم دسمبر سے ڈرون کے استعمال کے لئے رجسٹریشن کر رہا ہے ، جو شہری ہوابازی کا محمکہ کرے گا۔وہاں اس مقصد کو پورا کرنے کے لئے، ’ڈرون پورٹ‘ بنائے جائیں گے، جہاں ڈرون کے اترنے اور پرواز کی خصوصی سہولت حاصل ہوگی۔ اس کے علاوہ، ہوا میں خصوصی ایر کوریڈوربنائے جائیں گے ۔ اس راستےسے کم وقت میں ایک ہسپتال سے دوسرے ہسپتال پہنچایا جا سکے گا۔




احباب آپ کو یاد ہو گا اس سے ملتی جلتی ایک پوسٹ کچھ عرصہ پہلے کی تھی کہ جاپان اڑنے والی کاروں کے لیے فضاء میں روٹ بنانے پر کام کر رہا ہے جہاں اڑنے والی کاریں ایک خاص روٹ میں سفر کریں گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں