341

عالم اسلام پر دہشتگردی کا لیبل دن بدین بڑھتا جا رہا ہے

 اس وقت اپنے صفوں میں اتحاد اور یکجا ہونے کی ضرورت ہے. معاشرے میں ہر فرد کا اپنا کردار ہوتا ہے. آؤ سب ملکر پاکستان کو مضبوط کریں. تمام سیاسی اختلافات بھول کر ایک ہوجائیں. پوائنٹ سکورنگ نہ کریں بلکہ ملک کو مضبوط بنانے کے لیے قربانیاں دیں. اداروں کو آذادانہ کام کرنے دیں.رسہ کشی چھوڑدیں. وسیع تر ملکی مفادات کے لیے کام شروع کریں. اہک دوسرے پر الزامات لگانا اور ٹانگیں کھینچناچھوڑ دیں. اپنے تحریر میں مخب وطن شاعر کے دعائیہ نظم کے کچھ مصرعے شامل کرونگا. شاعر دعا مانگتے ہوئے فرماتے ہیں.

میرے مولا میری دھرتی کو سلامت رکھنا
لعل و یاقوت سی مٹی کو سلامت رکھنا
میری دھڑکن، میری پہچاں مرا اثباتِ وجود
میرے خالق ! میری ہستی کو سلامت رکھنا
رہیں نابود سدا اس کے بدی خواہ سارے
میرے گلشن میری بستی کو سلامت رکھنا
ساری دنیا میں رضا ایک ہے جو گھر اپنا
میری اس چار دیواری کو سلامت رکھنا

تحریر صوبیدار میجر ریٹائرڈ
بخت روم شاہ تمعہ خدمت عسکری
سیاسی و سماجی کارکن پی ٹی آئی بونیر خیبر پختونخواہ

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں