تامل ناڈو میں انڈیا کے سب سے بڑے نیوکلئیر پاور پلانٹ پر حملہ

کڈنکلم تامل ناڈو میں واقعی انڈیا کے سب سے بڑے نیوکلئیر پاور پلانٹ پر سائبر حملہ ہوا ہے جہاں سے ہیکرز انتہائی حساس ڈیٹا لے اڑے اس حوالے سے بھارتی حکام کو مہینوں پہلے ہی آگاہ کیا گیا تھا جب اسی نیوکلیئر ری ایکٹر کے کچھ یونٹس نے اچانک کام بند کردیا تھا.

حکام کو بتایا گیا تھا کہ انکے سسٹمز میں کچھ مشکوک قسم کے بگز موجود ہیں جو کسی بھی وقت سسٹم کو نقصان پہنچاسکتے ہیں. جس کے بعد سیکیورٹی مزید سخت کردی گئی لیکن اس حملے کے بعد سے بھارتی حکومت کے اس وقت ہوش اڑ گئے جب انہوں نے حملے کا جائزہ لینے کے لیے جانچ پڑتال کی تو خبر ہوئی کہ بھارت سے باہر بیٹھے ہیکرز انتہائی اہم اور حساس معلومات ہی نہیں لے گئے بلکہ کسی حد تک سارے سسٹم کو بھی کنٹرول کر رہے ہیں.

اسی نیوکلئیر پلانٹ کے عہدیدران سے اس بات سے انکار کیا ہے کہ جب ہمارا سسٹم کسی نیٹ ورک یا انٹرنیٹ سے منسلک ہی نہیں تو کیسے ہیک ہوا ہے جبکہ جلد ہی ان گدھوں کو اندازہ ہوگا کہ ہیکرز اسی پاور پلانٹ میں فزیکلی موجود ہیں اور ان کی رسائی سارے سسٹم تک ہے اور وہیں موجود رہ کر وہ سسٹم سے میں وائرس چھوڑ کر ڈیٹا لے اڑے. ان شاءاللہ اس وائرس کے متعلق بھی ایک علیحدہ سے تحریر لکھوں گا.

بھارتی حکومت نے اس چھپانے کی کوشش کی لیکن بھارتی نیشنل سیکیورٹی ایجنسی کے ایک ذیلی ادارے میں کام کرنے والے ایک سابقہ آفیسر نے اس بات کی تصدیق کردی ہے کہ سائبر حملہ ہوا ہے اور انتہائی حساس اہداف کو نشانہ بنایا گیا ہے جو کہ بھارتی سائبر ڈیفنس کی ناکامی کا ثبوت ہے.

یاد رہے دو ماہ کے دوران بھارت پر یہ بہت بڑے سائبر حملے ہوئے ہیں جو بھارت سائبر سیکیورٹی پر بہت بڑے سوالات کھڑے کررہا ہے.

ان میں چندریان مشن کے عین لینڈنگ کے دوران اسٹیشن سے رابطہ منقطع ہونے جس پر بھارتی ماہرین کو سائبر حملہ کا قوی شبہ ہے، اس کے علاوہ گزشتہ ماہ بھارتی ساختہ پہلے جنگی بیڑے وکرانت جس کے اندر سے سارا سسٹم ہی چوری ہوگیا یہاں تک کہ آپریشنل ڈیٹا کے ساتھ ساتھ فزیکل سسٹمز بھی کوئی چرا کر لے گیا.

جبکہ ایک سال کے دورانیے میں براہموس میزائل کا ڈیٹا بھی چوری ہوچکا ہے، جبکہ بھارت آرمی چیپ بھی اعتراف کر چکا ہے کہ انکا آرمی کا آپریشنل ڈیٹا بھی لیک ہوا ہے اور یہ سب کون کررہا ہے وہی جن کی عوام احساسِ کمتری کا شکار ہے.

یہ ہے بھارتی آئی ٹی ماہرین اور یہ ہیں بھارت کی وہ IT َExperties جن کی وجہ سے پاکستان نوجوان احساسِ کمتری کا شکار رہے ہیں کہ بھارت آئی ٹی میں ہم سے کہیں آگے ہے.

میرے پیارے آئی ٹی صرف سافٹوئیرز ڈیویلپ کرنے اور گوگل، فیس بک میں ایک عہدہ حاصل کرلینے کا نام نہیں ہے جو آئی ٹی ایکسپرٹ ملک اپنا نظام نہ بچا سکے، جن کی چھوٹی بڑی معلومات دشمن کے نشانے پر ہو، جن کی میزائیلوں سے لیکر ایٹمی پاور پلانٹ تک ساری معلومات ہیکرز منٹوں میں چرا لیں آپ اس ملک سے احساسِ کمتری کا شکار ہیں بڑی حیرت کی بات ہے.

شاید آپ نہیں جانتے کہ اس وقت بھارت کا مجموعی طور 65 فیصد آئی ٹی سیکٹر ہیکرز کے نشانے پر ہے جو کہ بھارت کو لاغر کردیں گے بھارت معیشت چند حملوں کی مار ثابت ہوگی.

آئی ٹی کی صلاحیتوں کے لحاظ سے پاکستان کہیں آگے ہے بس فرق اتنا ہے کہ جن کمپنیوں میں بھارت کو موقع ملتا ہے وہاں پاکستانیوں کو موقع فراہم نہیں کیا جاتا اس لیے خود پہ اعتماد کرنا سیکھیں آپکے پاس وہ دماغ ہیں جو دنیا میں کسی کے پاس نہیں بس اپنے آپ پر بھروسہ کرنا سیکھیں.

اگلے دو حملوں کی پیشگی اطلاع دے رہا ہوں ان شاءاللہ اگلا سائبر اٹیک ہندوستان ائیروناٹیکل لیمیٹڈ اور بھارتی بینکوں اور اسٹاک ایکسچینج پر ہوگا.
پاور پلانٹ سائبر حملے کی پوری تفصیل اور چوری شدہ ڈیٹا کی تفصیل ان شاء اللہ پھر کسی وقت شئیر کرونگا.

Attact on Indian Nuclear Plant

تحریر: #انوکھاسپاہی

اپنا تبصرہ بھیجیں