460

معاشی دہشتگردی اور قتل عام۔ تحریر صوبیدار میجر (ر) بخت روم

معاشی دہشتگردی اور قتل عام

آج وطن عزیز میں کرپشن کا ناسور اس قدر ہر جگہ اور ہر قومی ادارے میں پھیل چکا ہے کہ وہ معاشی قتل اور معاشی دہشت گردی کی شکل ہی اختیار کر گیا ہے. ملک کی جڑوں کو کھوکھلا کرنے والی انسانیت کے چہروں سے مسکراہٹ کو چھینے والی، غریب کے منہ سے نوالہ چھیننے والی اور متوسط و غریب لوگوں کا جو ہر روز قتل عام ہوتا ہے یہ ان ہی لوگوں کی وجہ سے ہے. جنہوں نے اربوں ڈالر لوٹ کر بیرونِ ملک بیجھے ہیں.

جب ان مگرمچھوں پر ہاتھ ڈالا جاتا ہے تو پڑھے لکھے جاہل لوگ ان کے حق میں نعرے بلند کرتے چوکوں, اسمبلیوں کے دروازوں کے سامنے اور اندر مظاہرے کرکے ملکی نظام کو روکنے کی ناکام کوشش کرتے ہیں. لیکن افسوس کے ساتھ کہنا پڑتاہے کہ آج ہمارا معاشرہ جہاں شعور اور بصیرت کا فقدان ہے معنوی و روحانی نام کی کوئی شئے سے بہت ہی کم لوگ آشنا ہیں۔




بدقسمتی سے اس معاشرے میں سماج کے عام افراد کے دردوں اور دکھوں کو سمجھنے والے اور سماجی مسائل کو تشخیص دینے والے با بصیرت لوگوں کی بھی کمی ہے جو معاشرے کی نبض پر ہاتھ رکھیں اور معاشرتی، سماجی اور معاشی غرض کی ہر طرح کے مسائل کی تشخیص دے سکیں اور ان کا مناسب حل بھی تجویز کر سکیں۔

خان صاحب اب وقت آگیا ہے کہ ان معاشی دہشتگردوں سے قوم کی جان چھڑائی جائے. قدم بڑھاؤ قوم اپکے ساتھ ہے. مجھے اپنے نوجوانوں سے درخواست ہے کہ اس نازک دور میں حکومت کی اچھی پالیسیوں کی تشہیر سوشل میڈیا پر کی جائے تاکہ یہ دہشتگرد اور قاتل اپنے مذموم ارادوں میں کامیاب نہ ہو جائے.




تخریر و تجزیہ
صوبیدار میجر (ر) بخت روم شاہ تمغہ خدمت عسکری
سیاسی و سماجی کارکن پی ٹی آئی بونیر

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں